مجھے جانوروں کے ڈاکٹر کے پاس لے جاؤ

بیمار شوہر ، مجھے جانوروں کے ڈاکٹر کے پاس لے جاؤ

بیوی ، حیرت سے ، وہ کیوں ؟

شوہر، روز مرغے کی طرح اٹھ جاتا ہوں ، پھر گھوڑے کی طرح بھاگ بھاگ کر آفس جاتا ہوں، وہاں سارا دن گدھے کی طرح کام کرتا ہوں ، گھر آ کر طوطے کی طرح “ہاں جی،ہاں جی” کرتا ہوں ، بکرے کی طرح کھانے میں سبزی ملتی ہے . بلی کی طرح بچے پالتا ہوں ، اور پھر رات کو بھینس کے ساتھ سو جاتا ہوں ، میرے اندر انسانوں والی کون سی بات ہے

ہا ہا ہا ……….

0