پڑوسیوں کے چونچلے

ایک عورت اپنی سہیلی کو ملنے گئی، جنہوں نے نیا نیا گھر شفٹ کیا تھا;

دوران ملاقات پوچھا:-

“کیسا لگا نیا گھر”

میزبان خاتون بولی:-

“ویسے تو بہت اچھا ہے مگر میں سامنے والے ہمسایوں کی وجہ سے بہت پریشان ہوں”

مہمان خاتون نے پوچھا:-

“وہ کیوں؟”

اس پر میزبان خاتون بولیں:-

“بس اس مکان میں دو نئے نویلے میاں بیوی رہتے ہیں; جب دیکھو ان کے ” چونچلے ” جاری رہتے ہیں; میاں نے اپنی بیوی کو ہاتھ کاچھالا بنا کر رکھا ہوا; ہر وقت ناز برداریاں, لاڈ پیار, ہنسی مذاق”

مہمان خاتون بولی:-

“یار! اس طرح میاں بیوی کو سب کے سامنے تو نہیں کرنا چاہیے”

اتنا کہہ کر مہمان خاتون نے کھڑکی کھول کے پڑوسیوں کے گھر جھانکنا چاہا تو میز بان خاتون بولی:-

“کھڑکی سے نہیں نظر آۓ گا, یہ ٹیبل دیوار کے ساتھ لگاؤ, اس پہ سٹول رکھ کے روشندان سے دیکھو, روشندان سے”

0