چرسی اور رکشے والا

تین چرسی رکشے میں بیٹھے، رکشے والے نے رکشہ سٹارٹ کر کے بند کر دیا اور بولا: لو صاحب پہنچ گۓ۔۔۔

ایک چرسی نے شکریہ ادا کیا، دوسرے نے پیسے دیۓ اور تیسرے نے رکشہ والے کو تھپڑ مار دیا۔

رکشہ والا سمجھا کہ اسے پتا چل گیا ہے۔

چرسی بولا: سالے آج تو مروا ہی دیتا، اتنا تیز رکشہ چلاتا ہے۔۔۔

چرسی کی فرمائش

charsi jokes in urdu

ایک چرسی مزار پر گیا اور دعا مانگنے لگا

” میرا بانڈ ہر صورت نکلنا چاہیے جو بھی ہو “

جیسے ہی وہ دعا مانگ کر مزار سے باہر آیا اس کا پرائز بانڈ کسی نے جیب سے نکا ل لیا

چرسی الٹے پاؤں واپس مزار گیا اور کہنے لگا

بابا جی، پہلے پوری گل سمجھ لیا کرو تے پھر ایکشن لیا  کرو