پٹھان کا مہمان

ایک آدمی پٹھان سے ملنے اس کے علاقے میں گیا تو پٹھان اسے اپنا علاقہ دکھانے لے گیا-

ایک جگہ پٹھان نے مہمان سے کہا یہاں نیچے بیٹھ جاؤ، یہاں ھماری دشمنی ہے۔

مہمان نے کہا دشمنی تو تمہاری ھے میں کیوں نیچے بیٹھ جاؤں؟

پٹھان نے کہا: ” یارا۔ ھم نے اس کا مہمان مارا تھا وہ کہتا ھے ھم بھی تمھارا مھمان مارے گا”

تمہاری بیٹی بھاگ گئ ہے

 ایک پٹھان دوسویں منزل پر کھڑا تھا

کسی کی آواز آئ

“اوۓ سردار ! تمہاری بیٹی بھاگ گئ ہے”

یہ سنتے ہی پٹھان نے نیچے چھلانگ لگا دی

آٹھویں منزل پر پہنچا تو یاد آیا کہ اُس کی تو کوئ بیٹی ہی نہیں

پانچویں منزل تک پہنچا تو یاد آیا کہ میری تو ابھی شادی بھی نہیں ھوئ ھے۔

اور جب نیچے گرا تو یار آیا کہ وہ تو سردار ہی نہیں ہے۔

پٹھان کا چڑیا گھر

ایک پٹھان نے چڑیا گھر بنایا اور ٹکٹ پچاس روپے رکھی، لیکن کوئی بھی نہیں آیا .

پھر پٹھان نے پچیس روپے رکھی ، پھر بھی کوئی نہیں آیا

پھر پٹھان نے دس روپے رہی، پھر بھی کوئی نہیں آیا

پٹھان نے تنگ آ کر انٹری فری کر دی اورجب  چڑیا گھر لوگوں سے کھچا کچھ بھر گیا تو پٹھان نے شیر کا پنجرہ کھول دیا، بس پھر کیا، باہر نکلنے کی ٹکٹ دو سو روپے تھی.

ہا ہا ہا ہا ہا ہا ہا ہا ہا …..

پٹھان بچوں کے نام

پٹھان کے تین بچے ہوے . نام رکھا حسرت خان ، حرکت خان، برکت خان. پھر تین اور بچے ہوے . نام رکھا دریا خان، سمندر خان، سیلاب خان. پھر تین اور بچے ہوے. نام رکھا ہمت خان، حوصلہ خان، برداشت خان،پھر تین .اور بچے ہوے اس بار بیوی نے نام رکھا بس کر خان، ہوش کر خان، رحم کر خان.